خراب امپائرنگ پر کپتان ہرمن پریت کور نے کہا- اگلی بار جب ہم بنگلہ دیش آئیں گے…

[ad_1]

جھلکیاں

ہرمن پریت کور امپائر کے فیصلے سے خوش نہیں ہیں۔
کپتان ہرمن پریت میچ کے بعد ناراض نظر آئیں

نئی دہلی. بنگلہ دیش کے دورے پر گئی ہندوستانی خواتین ٹیم ون ڈے سیریز نہیں جیت سکی۔ سیریز 1-1 سے برابری پر ختم ہوئی۔ تیسرا ون ڈے تنازعات سے بھرا ہوا تھا کیونکہ کپتان ہرمن پریت کور امپائر کے فیصلے سے خوش نہیں تھیں۔ اس نے غصے میں اپنا بیٹ بھی اسٹمپ پر مارا۔ میچ کے بعد وہ کافی مایوس نظر آئیں اور پریس کانفرنس میں بڑی بات کہہ ڈالی۔

میچ کے بعد حرمین نے کہا کہ اس سیریز میں ہمیں بہت کچھ سیکھنے کو ملا۔ یہاں جس طرح امپائرنگ ہوئی ہے وہ حیران کن ہے۔ ہم اس سے حیران ہیں۔ اگلی بار جب بھی ہم بنگلہ دیش آئیں گے، ہم اس عزم کے ساتھ آئیں گے کہ ہمیں یہاں بھی ایسی ہی امپائرنگ کا سامنا کرنا پڑے گا اور ہم اس کے لیے تیار ہوں گے۔

کیا ہندوستان ویسٹ انڈیز کے خلاف 100 واں ٹیسٹ جیتے گا؟ اب تک کون سی ٹیم آگے رہی، جانیے اعدادوشمار

ہرمن پریت نے مزید کہا، “بنگلہ دیش کی ٹیم نے اچھی بلے بازی کی۔ ہم نے کھیل بھی اچھی طرح چلایا لیکن جیسا کہ میں نے پہلے کہا کہ خراب امپائرنگ کی وجہ سے میچ کا رخ بدل گیا اور ہم میچ ہار گئے۔ بتا دیں کہ ہندوستانی ٹیم تیسرے ون ڈے میں صرف 225 رنز بنا سکی۔

33 سالہ یوزویندر چہل، T20I میں خاص کارنامہ کرنے والے پہلے ہندوستانی، شطرنج سے کرکٹ تک کا سفر کیسا رہا؟

کیا تھا سارا معاملہ؟

دراصل، ناہیدہ اختر بنگلہ دیش کے لیے 34 واں اوور کر رہی تھیں۔ امپائر نے ہرمن پریت کو اس گیند پر ایل بی ڈبلیو آؤٹ کر دیا جسے ناہیدہ نے چوتھی گیند پر بولڈ کیا۔ ہرمن پریت اس فیصلے سے خوش نہیں تھیں۔ اس نے اشارہ کیا کہ گیند اس کے پیڈ سے نہیں بلکہ اس کے بلے سے ٹکرائی۔ لیکن امپائر نے اس پر زیادہ توجہ نہیں دی۔ ہرمن پریت نے سامعین کی طرف اپنا انگوٹھا بھی دکھایا۔ بتا دیں کہ ہرمن پریت کور اس میچ میں 21 گیندوں میں صرف 14 رن ہی بنا سکی تھیں۔

ٹیگز: بنگلہ دیش، ہرمن پریت کور، ہندوستانی خواتین کرکٹ

[ad_2]
Source link

کے بارے میں alrazanetwork

یہ بھی چیک کریں

IND vs WI ODI: ویسٹ انڈیز کی ٹیم کا اعلان، طوفانی کھلاڑی کی 2 سال بعد واپسی، بھارت کے خلاف 2 سنچریاں

[ad_1] جھلکیاں ویسٹ انڈیز نے بھارت کے خلاف ون ڈے سیریز کے لیے سکواڈ کا …

Leave a Reply

واٹس ایپ پیغام بھیجیں۔
%d bloggers like this: